ہر سال 750 ارب ڈالرز کی غذا ضائع ہونے لگی

دنیا میں ہر سال ایک تہائی غذا کچرے میں چلی جاتی ہے جو کہ دو ارب افراد کا پیٹ بھرنے کے لیے کافی ہے جبکہ اس کے نتیجے میں 750 ارب ڈالرز کا نقصان ہوتا ہے۔
یہ انکشاف اقوام متحدہ نے اپنی ایک رپورٹ میں کیا۔
یہ غذائیں کھیتوں سے میز تک پہنچنے کے ہر مرحلے میں ضائع کی جاتی ہیں اور اکثر اوقات تو ان کی شکل پسند نہ آنے پر کوڑے میں ڈال دیا جاتا ہے۔
کھیتوں میں اچھی نظر نہ آنے والی فصل کو سڑنے کے لیے چھوڑ دیا جاتا ہے، دکانوں میں لوگ داغ لگے پھلوں اور سبزیوں کو مسترد کردیتے ہیں اور گھروں میں ہم بچی ہوئی غذا دوبارہ کھانے سے انکار کردیتے ہیں۔
اس حوالے سے شعور اجاگر کرنے کے لیے ہر سال ورلڈ فوڈ ڈے منایا جاتا ہے جس کا مقصد دنیا سے بھوک ختم کرنے کے لیے اقدامات تجویز کرنا بھی ہے۔
یہاں آپ جان سکیں گے کہ دنیا بھر میں کون کون سی غذائیں ہر سال سب سے زیادہ ضائع کی جاتی ہیں۔
یہ بھی پڑھیں : رات کے وقت یہ غذائیں کھانے سے گریز کریں
دودھ، دہی اور پنیر 17.1 فیصد

مزید پڑھیں  پھانسی کے خلاف دائر پٹیشن پر اسلامی نظریاتی کونسل کا مؤقف طلب


چکن اور گائے کا گوشت 21.5 فیصد

دالیں، مٹر، چنے اور بیج 22.1 فیصد

دلیہ، روٹی اور چاول 29.1 فیصد

مزید پڑھیں  پی ٹی آئی ’بلے‘کےنشان پرضمنی انتخابات نہیں لڑ سکتی، الیکشن کمیشن

سی فوڈ 34.7 فیصد


پھل اور سبزیاں 45.7 فیصد

آلو، چقندر اور گاجریں 46.2 فیصد

مزید پڑھیں  نوازشریف کا نام ای سی ایل میں شامل کرنے کی درخواست پرفیصلہ محفوظ

اپنا تبصرہ بھیجیں