ٹرمپ کے اسٹیل اور المونیم کی درآمد پر پابندی کے بل پر دستخط

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اسٹیل اور المونیم کی درآمد پر پابندی کے بل پر دستخط کردیئےہیں۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق امریکی صدر ٹرمپ نے غیر ملکی اسٹیل کی درآمد پر 25 فی صد اور المونیم مصنوعات کی درآمد پر 10 فیصد اضافی ٹیکس لگانے کی منظوری دے دی ہے ۔ نئے ٹیرف پر آئندہ پندرہ دنوں بعد عمل درآمد شروع کردیا جائے گا تاہم ابتدائی طور پر کینیڈا اور میکسیکو کو اس سے استثنا دیا گیا ہے ۔

امریکی صدر ٹرمپ کا کہنا تھا کہ سابق تجارتی پالیسیوں سے امریکا کو سخت نقصان پہنچ رہا تھا تاہم انہوں نے کہا کہ امریکا کے اتحادی ممالک اس درآمدی ڈیوٹی سے استثنا کے لیے مذاکرات کرسکتے ہیں ۔

مزید پڑھیں  وطن واپسی؛ نواز شریف صاحبزادی مریم نواز کے ہمراہ ابوظہبی پہنچ گئے

ٹرمپ کا کہنا تھا کہ نافٹا تجارتی معاہدے سے امریکا کو نقصان پہنچا ہے اور اب وقت آگیا ہے اس پر دوبارہ مذاکرات کیے جائیں ۔

امریکی ایوانِ نمائندگان کے ری پبلکن اسپیکر پال رائن اور پارٹی کے کئی سینئر رہنماؤں نے ٹرمپ کو نیا ٹیکس نافذ نہ کرنے پر قائل کرنے کی کوششیںکی تھی تاہم صدر ٹرمپ نے نیے ٹیکس پر دستخط کردیے ۔

مزید پڑھیں  پرویز مشرف کی واپسی براستہ اوسلو!

جاپان نے امریکی فیصلے کو قابل افسوس قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ اس فیصلے کے نتائج نقصان دہ ہوں گے اور امریکا اور جاپان کے معاشی تعلقات کو دھچکا لگے گا۔

برطانیہ کے وزیر تجارت لائم فوکس نے صدر ٹرمپ کے فیصلے پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ تجارتی تنازعات کو حل کرنے کا یہ طریقہ غلط ہے ۔

مزید پڑھیں  سپریم کورٹ میں پاناما کیس کی سماعت مکمل، فیصلہ محفوظ

فرانس کے وزیر معاشیات نے اپنے ردعمل میں کہا کہ صدر ٹرمپ کا فیصلہ افسوس ناک ہے کیونکہ تجارتی جنگ میں ہار کے سوا کچھ نہیں ۔ اس فیصلے کے حوالے سے وہ اپنے اتحادیوں سے مشاورت کے بعد مناسب ردعمل دے گا ۔

یورپ یونین کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ نئی امریکی ڈیوٹی سے یورپی یونین کو استثنا دیا جانا چاہئے اور اس حوالے سے امریکا سے فوری وضاحت کی امید رکھتے ہیں ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں