محمد عرفان پر ایک سال کی پابندی عائد کردی گئی

لاہور: اسپاٹ فکسنگ کیس میں معطل کرکٹر محمد عرفان پر ایک سالہ کی پابندی اور 10 لاکھ روپے جرمانہ عائد کردیا گیا ہے۔
پیسر نے آج اپنے وکیل کے ہمراہ پی سی بی ہیڈ کوارٹرز میں اینٹی کرپشن یونٹ کے سامنے پیش ہو کر تحریری جواب جمع کروا دیا ہے۔ ان پر اینٹی کرپشن کوڈ کے آرٹیکل 2.4.4 کے تحت دو مرتبہ خلاف ورزی کا الزام ہے، اس شق کا اطلاق کسی بکی کے رابطے پر پی سی بی اینٹی کرپشن یونٹ کو مطلع نہ کرنے والوں پر ہوتا ہے۔ محمد عرفان کی جانب سے تحریری جواب جمع کرانے کے بعد ان پر ایک سالہ کرکٹ کھیلنے پر پابندی اور 10 لاکھ روپے جرمانہ عائد کیا گیا ہے۔

مزید پڑھیں  پاک بھارت کرکٹ روابط کی بحالی کے لیے کوششیں

لاہور میں پریس کانفرنس کے دوران محمد عرفان نے کہا کہ 14 مارچ کو اسپاٹ فکسنگ کیس میں انہیں معطل کردیا گیا تھا، انہیں دو الگ الگ جگہ پر اسپاٹ فکسنگ کی پیشکش کی گئی تھی لیکن انہوں نے پیشکشیں ٹھکرا دی تھیں، بدقسمتی سے وہ اس کی اطلاع پی سی بی کو نہیں دے پائے جس پر میں قوم سے معافی مانگتا ہوں۔

مزید پڑھیں  کراچی کی چھ لڑکیاں موٹرسائیکل لاہور پہنچ گئیں

اپنا تبصرہ بھیجیں