راکھی ساونت گرفتار ہونے سے بچ گئیں

بھارتی پنجاب کے شہر لدھیانہ کی مقامی عدالت نے بولی وڈ اداکارہ راکھی ساونت کی ضمانت منظور کرلی، جس وجہ سے وہ گرفتاری سے بچ گئیں۔

لدھیانہ کی عدالت نے پولیس کو حکم دے رکھا تھا کہ اداکارہ کو ہر حال میں 7 اگست تک گرفتار کرکے پیش کیا جائے۔

داکارہ پر گزشتہ برس ایک ٹی وی شو کے دوران اداکارہ والمیکی سماج کے خلاف نازیبا، تضہیک آمیز اور قابل اعتراض گفتگو کیے جانے کا الزام ہے۔
یہ بھی پڑھیں: راکھی ساونت کو گرفتار کرکے عدالت پیش کرنے کا حکم

مزید پڑھیں  راؤ انوار نے قانونی طریقے سے بیرون ملک سفر نہیں کیا، ایف آئی اے

اسی مقدمے کے سلسلے میں اداکارہ لدھیانہ کی اسی ہی عدالت کے سامنے رواں برس جولائی میں بھی پیش ہوئی تھیں۔

جولائی میں عدالت نے پہلے اداکارہ کی ضمانت منظور کرلی تھی، مگر ایک دن بعد ہی ضمانت کو منسوخ کرتے ہوئے پولیس کو حکم دیا تھا کہ راکھی ساونت کو ہر حال میں گرفتار کرکے 7 اگست تک عدالت میں پیش کیا جائے۔

مزید پڑھیں  مسلمان شخص سے دوستی،اسرائیلی لڑکی 'غیرت کے نام' پر قتل

تاہم اداکارہ نے گرفتاری کے احکامات کے خلاف عدالت میں درخواست دائر کر رکھی تھی، جسے عدالت نے منظور کرلیا۔

ہندوستان ٹائمز کے مطابق لدھیانہ کے ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج گربیر سنگھ نے راکھی ساونت کی ضمانت منظور کرتے ہوئے، انہیں حکم دیا کہ وہ پھر بھی عدالت میں پیش ہوں۔

مزید پڑھیں  سری نگرکی بیٹیاں

خیال رہے کہ راکھی ساونت نامناسب گفتگو کرنے پراداکارہ والمیکی سماج سے بھی معافی مانگ چکی ہیں، تاہم معاملہ عدالت میں ہونے کی وجہ سے انہیں بار بار لدھیانہ کی عدالت میں پیش ہونا پڑتا ہے۔

اداکارہ نے گزشتہ ماہ جولائی میں کہا تھا کہ اگر ان کا مقدمہ لدھیانہ کے بجائے ممبئی منتقل کیا جائے تو انہیں آسانی ہوگی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں