انٹرنیشنل اسلامک یونیورسٹی کوفیصل مسجد کی زمین خالی کرنے کی ہدایت

اسلام آباد: وفاقی دارالحکومت میں واقع فیصل مسجد کی زمین، دفاتر اور اعتکاف کی جگہ پر انٹرنیشنل اسلامک یونیورسٹی کے قبضے کا نوٹس لیتے ہوئے سینیٹ کمیٹی نے مسجد میں قائم یونیورسٹی کیمپس خالی کرانے کی ہدایت کردی۔

سینیٹر طلحہ محمود کی سربراہی میں سینیٹ کی کابینہ سیکریٹریٹ سے متعلق کمیٹی کا اجلاس ہوا۔

اجلاس کے دوران ڈپٹی ڈائریکٹر فیصل مسجد محمد طاہر نے سینیٹ کمیٹی کو بتایا کہ اسلامک یونیورسٹی نے فیصل مسجد کی زمین، تمام دفاتر، اسٹور اور بک شاپ پر قبضہ کر رکھا ہے اور عارضی طور پر کیمپس کھولنے کے بعد انتظامیہ اب قبضہ نہیں چھوڑ رہی۔

مزید پڑھیں  پاناما جے آئی ٹی: وزیراعظم کی صاحبزادی مریم نواز طلب

انہوں نے بتایا کہ یونیورسٹی نے مسجد کے کیفے ٹیریا پر بھی قبضہ کر رکھا ہے اور وہاں دفاتر جبکہ اعتکاف کی جگہ کو اسٹور بنا دیا ہے۔

مزید پڑھیں  بل گیٹس اب دنیا کے امیر ترین شخص نہیں رہے

ڈائریکٹر محمد طاہر کے مطابق انتظامیہ نے غیر قانونی طور پر گیسٹ ہاؤس بھی قائم کر رکھے ہیں اور مسجد کے نام پر سعودی حکومت سے براہ راست فنڈز لیے جارہے ہیں۔

مزید پڑھیں: اسلامی یونیورسٹی میں اسرائیلی اسٹال، 3 ملازمین معطل

سینیٹ کمیٹی نے فیصل مسجد کی زمین پر قبضے پر برہمی کا اظہار کیا۔

مزید پڑھیں  پاک فوج غیر ملکی جارحیت کو ہمیشہ سنجیدگی سے لیتی ہے:جنرل آصف غفور

اس موقع پر کمیٹی ارکان کا کہنا تھا کہ یونیورسٹی انتظامیہ کو اتنی زمین دی گئی پھر بھی وہ فیصل مسجد پر کیوں قابض ہے۔

کمیٹی نے چیئرمین ہائیر ایجوکیشن کمیشن (ایچ ای سی) کو بھی طلب کرلیا جبکہ فیصل مسجد میں قائم یونیورسٹی کیمپس خالی کرانے کی ہدایت کردی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں